rescue 1122 ambulance - زہریلا کھانا کھانے سے دلہا دلہن سمیت 30افراد بے ہوش، نشتر ہسپتال منتقل

ملتان میں شادی کی تقریب میں کھانا کھاتے ہی دلہا دلہن سمیت 30 افراد بے ہوش ہو گئے، جنہیں نشتر ہسپتال منتقل کیا گیا۔
پولیس نے 4 افراد کو گرفتار کرلیا ہے مزید کاروائی جاری ہے۔

تفصیل کے مطابق تھانہ قطب پور کے علاقہ چونگی نمبر 22 وہاڑی روڈ پر اجمل کی شادی کی تقریب تھی، جس میں شریک افراد نے کھانا کھایا اور کھانا کھاتے ہی بے ہوش ہونا شروع ہو گئے۔

دلہا اجمل، دلہن صبیحہ خانم سمیت دیگر باراتی جاوید، سونیا، رابعہ، سحرش، صفیحہ،ثنا، حسنین، اجمل، بذوار، شاہنیہ، ثنا، رابعہ، ثقلین، سجاد، یاسر، افضل، حسینہ، رابعہ، انعم، سائرہ اور اکرم بےہوش ہوگئے۔

اطلاع ملتے ہی ریکسیو ملتان کی بڑی تعداد میں گاڑیاں موقع پر پہنچیں، بےہوش افراد کو نشتر منتقل کرنے کا سلسلہ شروع کیا گیا۔

نشتر میں دلہا دلہن سمیت 30 افراد کو داخل کرایا گیا، جہاں دلہا اجمل سمیت 5 افراد کی حالت تشویشناک بتائی جا تی ہے۔

پولیس کے مطابق ابتدائی تفتیش میں یہ بات سامنے آئی ہے کہ شادی کی تقریب میں کھانا ختم ہونے پر باہر سے منگوایا گیا تھا ، جس میں استعمال ہونے والے نان میں کوئی زہریلی شے ملی ہوئی تھی، جس سے ان افراد کی حالت بگڑی ۔ پولیس کی جانب سے 5 افراد کو حراست میں لیا گیا ہے جس میں نان والے بھی شامل ہیں ۔کھانے اور نان کو لیب ٹیسٹ کے لئے بھیجا گیا ہے۔

یہ بھی ممکن ہے کہ کسی نے کھانے میں کو ئی زہریلی شے مکس کی ہو ، تمام پہلووں پر تفتیش جا ری ہے۔

ڈسٹرکٹ ایمرجنسی آفسیر کا کہنا ہے کہ واقعہ فوڈ پوائزنگ کا لگتاہے تاہم پولیس کاروائی جاری ہے ۔

ادھر نشتر میں زخمی زیر علاج ہیں، جن میں سے 5 کی حالت تشویشناک بتائی جارہی ہے۔

تاہم پولیس کاروائی میں مزید حقائق سامنے آئیں گے۔